سہولت کاری سے سیٹیں حاصل کرنے والوں کو ان کی زبان میں جواب دینے کا حق رکھتے ہیں شازیہ مری

سیکریٹر ی اطلاعات پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز شازیہ مری نے جی ڈی اے کی طرف سے اپنے جلسوں میں پاکستان پیپلزپارٹی کی قیادت کے خلاف بات کرتے ہوئے اپنی زبانیں سنبھالیں ورنہ انہیں اسی زبان میں جواب دینے کا حق رکھتے ہیں۔جی ڈی اے صرف انتخابات میں نمودار ہوتی ہے اور ہر مرتبہ انتخابات میں بری طرح شکست سے دوچار ہوتی ہے۔

پیپلز پارٹی کی طرف جاری بیان میں شازیہ مری نے کہا کہ 8فروری کے انتخابات میں سندھ کے عوام نے پیپلزپارٹی کے مخالفین کو دھول چٹائی ہے۔سانگھڑ 50برسوں سے فنگشنل لیگ کے قبضے میں تھا۔فنگشنل لیگ نے سانگھڑ کو تباہ کیا اب پیپلزپارٹی سانگھڑ کو سنوار رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ پیر پگاڑا کے مریدوں نے بھی پاکستان پیپلزپارٹی کو ووٹ دیا میں ان کی شکرگزار ہوں۔صدرالدین راشدی اپنی تقریر میں کس سے مدد مانگ رہے ہیں۔ اس ملک کے وارث عوام ہیں یہ بات جی ڈی اے کو سمجھنا ہوگی۔

شازیہ مری نے کہا کہ راشد سومرو اپنے لیڈر فضل الرحمن سے پوچھیں کہ خیبرپختونخوا کو کتنی رقم میں بیچا۔ انہوں نے کہا کہ ساری عمر سہولت کاری سے سیٹیں حاصل کرنے والوں کو اپنی عادتیں بدلنی ہوں گی۔انہوں نے کہا کہ صفدر عباسی کے لئے یہی سزا کافی ہے کہ اب ارباب رحیم ان کے لیڈر ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جیئے بھٹو کا نعرہ مخالفین کے دل میں تیرکی طرح چبھ رہا ہے۔ شازیہ مری نے کہا کہ گذشتہ دس برسوں میں سانگھڑ میں تاریخی کام ہوئے ہیں جن کا فائدہ عوام کو ہوا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ سانگھڑ کے عوام پاکستان پیپلزپارٹی پر اعتماد کرتے ہیں۔لگتا ہے کہ جی ڈی اے کو اپنی ہار کا اثر سیدھا ان کے دماغ پر ہوا ہے۔ شکستہ خوردہ سیاسی مینڈکوں کے رونے دھونے سے کوئی فرق نہیں پڑتا۔

سہولت کاری سے سیٹیں حاصل کرنے والوں کو ان کی زبان میں جواب دینے کا حق رکھتے ہیں شازیہ مری“ ایک

اپنا تبصرہ لکھیں